پی ٹی آئی نے این اے 133 لاہورکے ضمنی انتخابات میں میدان خالی چھوڑ دیا

لاہور( مانیٹرنگ ڈیسک ، این این آئی)پاکستان تحریک انصاف نے این اے 133 لاہورکے ضمنی انتخابات میں میدان خالی چھوڑ دیا۔میڈیا رپورٹس کے مطابق پی ٹی آئی نے کاغذاتِ نامزدگی مسترد ہونے کے خلاف سپریم کورٹ نہ جانے کا فیصلہ کر لیا۔این اے 133 کے ضمنی انتخابات میں پی ٹی آئی کے نامزد امیدوار جمشید اقبال چیمہ کا کہنا ہے کہ ریٹرنگ افسر

نے کاغذات نامزدگی مسترد جب کہ ٹربیونل اور ہائیکورٹ نے اعتراض برقرار رکھا ہے۔سپریم کورٹ جانے کے لیے 7 دن کا وقت لگ سکتا ہے۔عدالت جائیں گے تو انتخابی مہم نہیں کر سکیں گے۔جمشید چیمہ نے مزید کہا کہ سپریم کورٹ سے رجوع نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔حلقے میں 40 ہزار بوگس ووٹ ہیں،ان کے خاتمے کے لیے کام کریں گے۔علاوہ ازیں پاکستان تحریک انصاف کے سینئر مرکزی رہنما جمشید اقبال چیمہ نے کہا ہے کہ ہم نے معیشت کی ابتری کے حوالے سے جو اندازے لگائے تھے مسلم لیگ(ن) کی حکومت اس سے کہیں زیادہ کھلواڑ کر کے گئی ہے ، ماضی کے حکمران ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت معیشت کی راہ میں بارودی سرنگیں بچھا کر گئے جس کا خمیازہ پوری قوم کو بھگتنا پڑا ہے ۔ اپنے بیان میں انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) اپنی سیاست بچانے کیلئے قومی اداروں کے خلاف گھنائونا کھیل کھیل رہی ہے جس کے انتہائی بھیانک نتائج برآمد ہوں گے۔ عوام قومی اداروں کی عزت اور

دفاع کیلئے سیسہ پلائی ہوئی دیوار کی طرح کھڑی ہے لیکن اداروں کو بھی اپنے اوپر حملہ آور ہونے والوں کے خلاف قانون کے مطابق نوٹس لینا چاہیے ۔ انہوںنے کہا کہ سابقہ حکمران موٹر ویز، پاکستان ٹیلی وژن سمیت دیگر قومی اداروں کو گروی رکھ کر حکومت کر رہے تھے ، ان کے چھوڑے ہوئے پہاڑ جیسے قرضوں پرسالانہ صرف سود کی مد میں اربوں روپے کی ادائیگیاں کرنا پڑ رہی ہیں۔ 2008سے 2018ء کے دوران غیر ملکی قرضوں میں چار گنا اضافہ ہوا ہے اور اس کے ساتھ ساتھ سوچے سمجھے منصوبے کے تحت ایسے اقدامات کئے گئے تاکہ آنے والی حکومت مشکلات سے باہر نہ نکل سکے۔

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *